Flag

An official website of the United States government

امریکہ کی جانب سے خواتین تاجروں کو کاروبار میں ترقی کے لیے بنیادی سرمایہ کی فراہمی
کی طرف سے
1 منٹ پڑھیں
نومبر 2, 2022

اسلام آباد ( ۳   نومبر۲۰۲۲ء)- ریاستہائے متحدہ امریکہ کی مالی اعانت سے فعال، اکیڈمی فار ویمن انٹرپرینوئرز(اے ڈبلیو اِی) کی دوسری کھیپ کےتِیس سے زیادہ شرکاء نے اپنے تجارتی منصوبوں کے لیے بنیادی سرمایہ کاری کے لیے۲۸ اکتوبر کو منعقد ہونے والی مسابقتی سرگرمی میں حصہ لیا۔ پاکستان اورامریکہ سے تعلق رکھنے والی خواتین تاجروں پرمشتمل ججوں کے ایک پینل نے شرکاء کے تجارتی منصوبوں کی جانچ پڑتال اورسماعت کے بعد چار سرفہرست منصوبوں کا انتخاب کیا۔ بنیادی سرمایہ کاری کے حُصول میں اول نمبرآمنہ آفریدی نے بانس سے ماحول دوست ٹوتھ برش بنانے کے منصوبہ پرحاصل کیا دوسرے نمبر پرنایاب گل کا سلائی بُنائی سے پوشاک کی تیاری کا منصوبہ رہا۔ خوش بخت حسین کوغذائی سپلیمینٹس کی فراہمی کے سلسلہ میں تیسرا جبکہ آسیہ عمر خان کو صحتمند پکوان اوراسکول میں کھانوں کی دستیابی کے تجارتی منصوبوں پر چوتھا نمبر دیا گیا۔

کامیاب ہونے والے چارتجارتی منصوبوں کو پاکستان میں کاروبار کے آغاز یا توسیع کے لیے بالترتیب ساڑھے پانچ ہزار، ساڑھے چار ہزار، ساڑھے تین ہزار اور ڈھائی ہزار ڈالر مالیت کی معاونت فراہم کی جائے گی۔

اے ڈبلیو اِی پروگرام میں شریک ہونے والی۸۰ خواتین تاجروں نے مستحکم پاکستانی ماہرین تجارت کی نگرانی اوررہنمائی میں۱۰ ستمبر کواپنی تربیت مکمل کی اور بعد ازاں تربیتی نصاب میں حاصل کی گئی معلومات کوعملی میدان میں بروئے کار لانے کے لیے بنیادی سرمایہ کاری کے حصول کی مسابقت میں حصہ لیا۔اس موقع پرامریکی سفارتخانہ کی ڈپٹی قونصلر برائے پبلک ڈپلومیسی جیکلین ڈیلے نے تربیت کی تکمیل پر خواتین کومبارکباد پیش کرتے ہوئے کہا کہ شرکاء کی کامیابی دراصل پاکستان کی کامیابی ہے اور پاکستان میں متحرک تاجر،کاروباری رہنماء اورمعاشی طور پراثرانداز ہونے والی شخصیت بننے کے لیےخواتین کی معاونت ہمارے لیے باعث فخر ہے۔

واضح رہے کہ اے ڈبلیو اِی ایروزونا اسٹیٹ یونیورسٹی کے تھنڈربرڈ اسکول برائے بین الاقوامی انتظامی اُموراورامریکی قدرتی وسائل کمپنی فری پورٹ میک مارن کا تیار کردہ تین ماہ پرمُحیط محنت طلب آن لائن تربیتی نصاب ہے جو ڈریم بلڈر پلیٹ فارم استعمال کرتے ہوئے مکمل کیا جاتا ہے۔ اے ڈبلیو اِی تجارت کی خواہاں خواتین کی بنیادی معلومات میں اضافہ، سرمایہ کاری مواقع تک رسائی میں مدد، کاروباری وسعت اور تجارت میں کامیابی کے امکانات روشن کرنے کے مقصد سے ترتیب دیا گیا ہے۔

حال ہی میں امریکی مشن سے منسلک لنکن کارنرز کی ملتان، مظفرآباد، خیرپوراورپشاور میں قائم چار شاخوں نےمقامی خواتین کے لیے اکیڈمی آف ویمن انٹرپرینوئرز کی تربیت کا انعقاد کیا۔ تربیت مکمل کرنے والی خواتین اب امریکی تبادلہ پروگراموں کے بین الاقوامی نیٹ ورک اور پاکستان یوایس ایلومنائی تنظیم کی بھی رُکن ہیں۔ اس حوالہ سے مزید معلومات  امریکی دفتر خارجہ اورلنکن کارنرز پاکستان کی ویب سائیٹ پردستیاب ہے۔

###